لاوڈا نے لوٹ مچائی ہے 

307
ایڈیشن 13
ڈل جھیل کے گرد گرین بیلٹ میں غیر قانونی تعمیرات بلا روک ٹوک جاری ہیں۔
ایڈیشن 17
’کے زین‘ نے اپنے 13ویں اور 17ویں ایڈیشن میں اس بات کا پردہ فاش کیا کہ کس طرح LAWDA سری نگر کے فخر، ڈل جھیل کی حفاظت کے اپنے بنیادی کام میں ناکام رہی ہے۔ کے زین نے تجویز پیش کی تھی دی تھی کہ LAWDA کو ختم کر دینا چاہیے اور اس کے ملازمین کو ڈل کی آلودگی کیلئے جوابدہ بنا نا چاہئے ۔مرکزی زیر انتظام خطے کی انتظامیہ نے ’کے زین‘ کی طرف سے اجاگر کیے گئے مسئلے کا نوٹس لیا، اور ڈل جھیل کی صفائی کے لیے سنجیدگی سے کام کر رہی ہے۔
جے کے پولیس کو دہشت گردی کے خلاف جنگ میں قائدانہ کردار کیوں دیا جانا چاہیے۔
ایڈیشن 17
’کے زین ‘نے اپنے 17 ویں ایڈیشن میں اس بات پر روشنی ڈالی ہے کہ جموں و کشمیر پولیس نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کو کامیابی سے لڑا ہے، اور اس کے مقامی رابطے اور مقامی جڑوں کی وجہ سے دہشت گردی کے خلاف جنگ جیتنے کی صلاحیت ہے۔ اس ایڈیشن کے بعد، جموں و کشمیر پولیس کے اندر ایک ریاستی تحقیقاتی ایجنسی کی تشکیل کی گئی ہے جو دہشت گردی سے متعلق معاملات کی تیز رفتار تحقیقات کے ساتھ ساتھ دہشت گردی کے خلاف جنگ کے لیے مرکزی ایجنسیوں کے ساتھ تال میل قائم کر رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here